Go to ...
RSS Feed

تھر میں 9بچوں کی ہلاکت سندھ حکومت کی نا اہلی اور تھر کے عوام کے ساتھ ناروا سلوک ہے۔ اراکین سندھ اسمبلی ایم کیو ایم پاکستان کئی برس سے غزائی قلت اور بیماریوں کی وجہ سے متعدد بچے اپنی جان سے پاتھ دھو بیٹھے ہیں۔ وفاق اور صوبہ غفلت کا مرتکب ہو رہا ہے۔ وزیر اعلی سندھ تھر میں صحت کی سہولتوں کی فراہمی اور غذائی قلت کی کمی دور کرنے کے لئے خصوصی اقدامات کریں۔ صوبائی وزیر صحت تھر کا دورہ کریں جو روایتی نہ ہو بچوں کی جان بچانے کے لئے تمام ممکنہ اقدامات بروئے کا ر لائے جائیں۔ اراکین سندھ اسمبلی ایم کیو ایم پاکستان کراچی۔26نومبر2019


متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے اراکین سندھ اسمبلی نے تھر میں غذائی قلت، صحت کی سہولتوں کے فقدان، مختلف امراض میں مبتلا ہو کر 9بچوں کے جاں بحق ہونے پر گہرے دکھ اور تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ تھر میں 9بچوں کی ہلاکت سندھ حکومت کی نا اہلی اور تھر کے عوام کے ساتھ ناروا سلوک ہے۔کئی برس سے غزائی قلت اور بیماریوں کی وجہ سے متعدد بچے اپنی جان سے پاتھ دھو بیٹھے ہیں۔ وفاق اور صوبہ غفلت کا مرتکب ہو رہا ہے۔تمام تر دوروں اور دعووں کے باوجود تھر کے نہ اسپتال اپ گریڈ کئے گئے ہیں نہ انہیں ویکسین فراہم کی گئی ہیں۔ غذائی قلت پر قابو پانے کے لئے بھی کوئی اقدامات نہیں کئے گئے۔ یہ رویہ افسوسناک اور بے حسی کو ظاہر کرتا ہے جسکی جتنی مذمت کی جائے کم ہے۔ اراکین سندھ اسمبلی ایم کیو ایم پاکستان نے مطالبہ کیا کہ وزیر اعلی سندھ تھر میں صحت کی سہولتوں کی فراہمی اور غذائی قلت کی کمی دور کرنے کے لئے خصوصی اقدامات کریں۔ صوبائی وزیر صحت تھر کا دورہ کریں جو روایتی نہ ہو بچوں کی جان بچانے کے لئے تمام ممکنہ اقدامات بروئے کا ر لائے جائیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *