Go to ...
RSS Feed

ایم کیو ایم پاکستان کے کنوینر ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی کی جامعہ فاروقیہ کے مہتمم مولانا عاد ل کے جاں بحق ہونے کی شدیدالفاظ میں مذمت کراچی میں سوچی سمجھی سازش کے تحت ایک بار پھر فرقہ وارانہ آگ بھڑکانے کی کوشش کی جارہی ہے،ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نے اعلی حکام سے مطالبہ کیا کہ دہشت گردوں کو قرار واقعی سزا دی جائے کراچی۔۔۔10،اکتوبر2020ء


متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے کنوینر ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نے فائرنگ کے نتیجے میں جامعہ فاروقیہ کے مہتمم مولانا عادل اور انکے ڈرائیور کے جاں بحق ہونے پرگہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیااور واقعے شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔اپنے ایک تعزیتی بیان میں ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نے مولانا عادل مرحوم کے سوگوارلواحقین سے دلی تعزیت اور ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے انہیں صبر کی تلقین کی اور واقعے کو کھلی دہشت گردی قرار دیا ہے۔انہوں نے کہا کہ کراچی میں سوچی سمجھی سازش کے تحت ایک بار پھر فرقہ وارانہ آگ بھڑکانے کی کوشش کی جارہی ہے۔انہوں نے کہاسندھ حکومت شہر کراچی میں امن قائم کرنے میں ناکام ہوچکی ہے،سندھ حکومت کی نا اہلی کی وجہ سے شہر میں لاء اینڈ آرڈر نہ ہونے کے برابر ہے۔ ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نے اعلی حکام سے مطالبہ کیا کہ واقعے کی مکمل تحقیقا ت کروائیں اور دہشت گردوں کو قرار واقعی سزا دی جائے۔انہوں نے دعا کی کہ اللہ تعالی مولانا عادل مرحوم اور انکے ڈرائیور کو جنت الفردوس میں اعلی مقام عطا کرے اور لواحقین کو یہ صدمہ برداشت کرنے کی توفیق عطا کرے۔(آمین)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *